سر ورق / افسانہ (صفحہ 21)

افسانہ

تقریباً پونے گیارہ بجے شکیل احمد چوہان

”جہاں خیر نہیں ہوتا وہاں شر ہوتا ہے اور جہاں لنگر نہ ہو وہاں بھوک ہوتی ہے۔ آپ اگر لنگر کو ختم کرو گے تو بھوک دنیا کا سب سے بڑا مذہب بن جائے گی، بھوک ہاتھی کو بندر بنا دیتی ہے اور انسان کو حیوان۔ اللہ کی شان دیکھیں …

مزید پڑھیں

ملاح۔۔سلمان بشیر

ملاح سلمان بشیر "وہ اک ملاح کا بیٹا تھا " دادا کی وراثت سے اسکی باپ کے حصہ میں جو زمین آئی تھی اسے وہ بیچ کر شہر پڑھنے چلا گیا تھا۔۔۔باپ نے بیٹے کی خواہش کو مدنظر رکھتے ہوئے وہ ساری زمین بیچ دی اور ساری رقم بیٹے کی …

مزید پڑھیں

بزدل… راجہ یوسف

” یہ محبت کا جنون ہے فرہاد ۔۔۔ میری محبت کا جنون ۔ ایسی محبت تمہیں کسی اور سے کہاں ملے گی۔۔۔ کون ہے جو اس طرح سے تیرا راستہ روکے ۔۔۔ تیر ا ہاتھ اپنے ہاتھ میں لے کر سر راہ اتنا کچھ سوچے کہ بات سوچ کی انتہاتک …

مزید پڑھیں

گزرا وقت۔ محمد ہشام

        "اماں! اللہ ہمیں کھانے کو کب دے گا؟”             وہ چونک پڑا۔ اس بچے کی جانب دیکھنے لگا، جس کی آواز اس کی سماعتوں سے ٹکرائی تھی۔ وہ ایک عام سی شکل کا سات، آٹھ سال کا کمزور سا بچہ تھا۔ …

مزید پڑھیں

کٹی ہوئی انگلیاں زارا فراز

کمرے کے بائیں جانب کھلنے والی کھڑکی  سے چاند  جھانک   کر اندر کی ویرانی کو حیرت سے دیکھتا  پھر بادلوں کے اوٹ میں چھپ جاتا اور پھر  کچھ لمحوں کے بعد  دوبارہ جھانکنے لگتا……. اس کی ٹھنڈی روشنی اسے  بار بار  چھو رہی تھی مگر اسے اس بات کا احساس  …

مزید پڑھیں

سناٹا۔۔نشاط پروین

سنّاٹا نشاط پروین انسان ابھی ہے ،ابھی نہیں ہے۔ سوچ کر کچھ عجیب سا لگتا ہے ۔کسی شاعر نے کیا خوب کہا ہے: کیا بھروسہ ہے زندگانی کا آدمی بلبلہ ہے پانی کا مجھے ابھی تک یقین نہیں آرہا ہے کہ بڑی پھوپھی اب نہیں رہیں۔جنہوں نے اپنے بال بچوں …

مزید پڑھیں

سوکھی ندی اور پیار کا پودا۔ اقبال حسن آزاد

سوکھی ندی اور پیار کا پودا اقبال حسن آزاد اسے اپنی بیوی سے محبت نہیں تھی مگر وہ اسے اچھی لگتی تھی۔اس کے بال کالے ،گھنے اور لمبے تھے۔پیشانی سفید اور بلند تھی۔بڑی بڑی سی بیباک آنکھیں،ستواں ناک ،بھرے بھرے سے یاقوتی لب جو پکار پکار کر کہتے آو¿ ہمیں …

مزید پڑھیں

دو افسانے۔۔ ملیحہ سید

‘الف ننگا’ از ملیحہ سید وہ بہت خوش تھی ۔ انٹرویو توقع سے کہیں زیادہ اچھارہا تھا ۔ انٹرویو کرنے والے اپنے باس کے جس وصف نے اس کی شاندار شخصیت اور شائستہ گفتگو سے بھی زیادہ اسے متاثر کیا تھا وہ اس کی خوش لباسی تھی۔ بہت جدو جہد …

مزید پڑھیں

رومال …زرّیں قمر

اس گلی کا نام اور نمبر تو نجانے کیا تھا مگر اس کے سرے پر جو ایک شانِ بے نیازی سے ایستادہ وہ بوڑھا پیپل کا درخت تھا اسی کی مناسبت سے وہ ’پیپل والی گلی‘ کے نام سے مشہور تھی۔ سرماکی ٹھٹھرائی صبح کچھ ایسی تھی کہ پیپل کی …

مزید پڑھیں

بیت الفہیم۔۔ محمد عرفان رامے

مےں خلق خدا کے اس طبقے سے تعلق رکھتی ہوں جو ہر صبح اپنے خوابوں کا گلا گھونٹ کر خود کو دن بھر ملنے والی نت نئی اذےتوں کے لےے ذہنی طور پر تےار کر لےتا ہے شاےد ےہی وجہ تھی کہ مےں نے کم عمری مےں ہی اپنی محرومےوں …

مزید پڑھیں