سر ورق / Tag Archives: افسانہ (صفحہ 10)

Tag Archives: افسانہ

یزید ۔۔۔سعادت حسن منٹو

یزید سعادت حسن منٹو سن سینتالیس کے ہنگامے آئے اور گزر گئے۔ بالکل اسی طرح جس موسم میں خلافِ معمول چند دن خراب آئیں اور چلے جائیں۔ یہ نہیں کہ کریم داد، مولا کی مرضی سمجھ کر خاموش بیٹھا رہا۔ اس نے اس طوفان کا مردانہ وار مقابلہ کیا تھا۔ …

مزید پڑھیں

سیلانی پاکستانی…شکیل احمد چو ہان

سیلانی پاکستانی شکیل احمد چو ہان ”ارے وہ دیکھو ”سیلانی پاکستانی“ آج پھر آگیا۔“ پا پڑ بیچنے والے پرویز نے چپس، بسکٹ والے حمیدسے کہا۔ سالاراحمد عرف سیلانی پاکستانی اپنی ہی دُھن میں خود کلامی کرتا ہوا اُن کے پاس سے گزا تھا۔ سیلانی پاکستانی سوشل میڈیا کا اسٹار ہے …

مزید پڑھیں

اینٹ 1947ء کی…لال شیخ

      اینٹ 1947ء کی بلال شیخ ابو بے روزگاری سے تنگ آ کر ہمیں لاہور لے آئے اِدھر اُن کے دوست نے اُن کو ایک دکان پر منشی کی نوکری لگوا دی گاؤں میں روزگار نہ مل سکا اور اگر ملتا تو حالات ساتھ نہ دیتے پورے لاہور …

مزید پڑھیں

چمک چهلو… ناصر خان ناصر

چمک چهلو ناصر خان ناصر "کیوں بے چرسی! کوئ مرغی پهنسی؟ ” بلو بائ نے چهالیہ کترتے ہوئے گلو سے پوچها جو بائیں کی کهنچیاں کس رہا تها… دلربا….بلو بائ کی نوچی ابهی کچی تهی….توڑے سیکه رہی تهی… "نہیں خانم…دانے ڈال رکهے ہیں جا بجا….کبهی تو کوئ پهنسے گی….وه ہاته …

مزید پڑھیں

سیلانی پاکستانی…شکیل احمد چو ہان

                سیلانی پاکستانی شکیل احمد چو ہان ”ارے وہ دیکھو ”سیلانی پاکستانی“ آج پھر آگیا۔“ پا پڑ بیچنے والے پرویز نے چپس، بسکٹ والے حمیدسے کہا۔ سالاراحمد عرف سیلانی پاکستانی اپنی ہی دُھن میں خود کلامی کرتا ہوا اُن کے پاس سے گزا تھا۔ سیلانی پاکستانی سوشل میڈیا کا اسٹار …

مزید پڑھیں

بارہ روپے…سعادت حسن منٹو

  منٹو کا ایک گمشدہ ا فسانہ تناظر: شمارہ نمبر ۲ ڈاکٹر اسد فیض منٹو نے سن ۴۷ءکے واقعات کو جس قدر سچائی اور انسانی جذبوں کی گھلاوٹ سے تحریر کیا ہے۔ وہ بے حد پرُ اثر اور یاد رہ جانے والا ہے۔یوں لگتا ہے کہ فسادات پر لکھی گئی …

مزید پڑھیں

بیوی کا بدلہ ۔ بابا جیونہ

بیوی کا بدلہ باباجیونا بنسی لال شہر کی گلیوں میں رکشہ چلایا کرتاتھا۔ بنسی لال لمبا تڑنگا ، کسرتی بدن اور نوکیلے نقوش کا مالک نوجوان تھا۔ رنگ تو اس کاسانولہ تھا مگردیکھنے والے کی نظر شایدبنسی لال کے رنگ پہ کم اور مضبوط بدن پہ زیادہ پڑتی ہوگی یہی …

مزید پڑھیں

خالی ہاتھ۔۔۔شاہد حسرت

خالی ہاتھ شاہد حسرت صبح کے دس بجے چکے تھے۔ میں حسب معمول اس وقت تک اپنے کام نمٹا چکی ہوتی۔ بچے اسکول چلے جاتےاور میاں صاحب اپنے دفتر ۔ میاں اور بچو ں کو رخصت کر نے بعد خو د نا شتہ کر تی، اپنے کمرے کے بستر اور …

مزید پڑھیں

دوڑ ۔۔۔ صغیر رحمانی

دوڑدوڑ صغیر رحمانی ”آپ کا خون سفید ہو چکا ہے۔“ ڈاکٹر کی حیران کن بات سن کر اپنی جھلاہٹ کو چھپا نے کی ناکام کوشش کرتے ہوئے میں نے ہونٹوں پر مصنوعی مسکراہٹ ڈالنے کی سعی کی۔ باوجود اس کے میری مسکراہٹ سے خفگی نمایاں ہوئے بغیر نہ رہ سکی۔ …

مزید پڑھیں

پھاٹک والا: اشرف گِل۔

پھاٹک والا: اشرف گِل۔       اللہ دتا کا خاندان ایک چھوٹے سے گاوں میں تین چار پشتوں سے آباد تھا۔اس خاندان کی عورتیں زمینداروں کے گھروں میں اور مرد کھیتوں میں مزدوری کرکے اپنے بال بچوں کا پیٹ پالتے تھے۔اسکا باپ دادا بھی مزدوری کے بے لگام گھوڑے کی باگ …

مزید پڑھیں